صرف پاکستان میں ہی ہراسانی میں ملوث شخص کوایوارڈ دیا جاسکتا ہے، عفت عمر

375

کراچی: اداکارہ و میزبان عفت عمر نے حکومت پاکستان کی جانب سے ملک کیلئے خدمات انجام دینے والی شخصیات کیلئے ایوارڈ کا اعلان کرنے پر کہا ہے کہ ایسا صرف پاکستان میں ہوسکتا ہے کہ مبینہ طور پر ہراسانی میں ملوث شخص کو ایوارڈ سے نوازا جائے۔

عفت عمر نے گزشتہ روز ٹوئٹر پر بغیر کسی کا نام لیے لکھا صرف پاکستان میں یہ ممکن ہے کہ حکومت کی طرف سے مبینہ طور پر ہراسانی میں ملوث شخص کو ایوارڈ دیاجائے۔ اس کے ساتھ انہوں نے پاکستان زندہ باد کا ہیش ٹیگ بھی استعمال کیا۔

یاد رہے کہ یوم آزادی کے موقع پر صدر پاکستان کی جانب سے ملک کے لیے خدمات انجام دینے والی 184 شخصیات کے سول ایوارڈز دینے کا اعلان کیا گیا تھا جس میں گلوکار علی ظفر کا نام بھی شامل تھا۔