بیروت دھماکے کی شفاف تحقیقات ہونی چاہیے، سیکرٹری جنرل اقوام متحدہ

218

نیویارک:اقوام متحدہ کے سیکرٹری جنرل نے کہا ہے کہ بیروت دھماکے کی شفاف تحقیقات ہونی چاہیے، عوام کاغصہ جائز ہے ان کی آواز سنی جانی چاہیے۔

واضح رہے کہ لبنان کے دارالحکومت بیروت میں ہونے والے دھماکوں کے بعد ملک بھر میں شدید احتجاج جاری ہے، گزشتہ روز لبنانی وزیراعظم حسن دیاب نے وزرا سمیت استعفے صدر میشال عون کو پیش کر دیئے تھے۔

گزشتہ منگل بیروت کی بندرگاہ پر تباہ کن دھماکوں سے دارالحکومت کا بیشتر حصہ تباہ ہو گیا ہے۔ دھماکوں کے نتیجے میں 220 سے زائد افراد ہلاک ہوئے جبکہ چھ ہزار کے قریب زخمی ہیں۔ ملک کو پندرہ ارب ڈالر سے زیادہ کا نقصان ہو چکا ہے۔