غدار ایاز صادق ملک توڑنے کے ایجنڈے پر کام کررہا ہے!

236

کیسا ملک پاکستان ہے جہاں غداروں، ملک دشمنوں کو کھلی چھٹی ملی ہوئی ہے، دنیا کے کسی بھی ملک میں دشمنوں اور فوج پر تنقید کرنے والوں پر سخت قانونی کارروائی کی جاتی ہے، پہلے تو کسی کو ملک کے خلاف بات کرنے یا فوج پر تنقید کرنے کی جرأت ہی نہیں ہوتی ہے اور اگر کوئی اشاروں اور کنایوں میں بات کر بھی لے تو اس کی اس طرح بات کرنے کی سزا بھی ملتی ہے، شائد پاکستان دنیا کا واحد ملک ہو گا کہ لوگ ہزاروں کے جلسے میں ملک توڑنے کی بات کرتے ہیں لیکن ان کا کچھ نہیں ہوتا، کوئٹہ کے جلسے میں اویس نورانی نے آزاد بلوچستان کی بات کی لیکن وہ آرام سے کراچی میں گھوم رہا ہے، محمود اچکزئی جو باڑھ افغانستان کے بارڈرز پر لگائی گئی ہے اس کو اکھاڑنے کی بات کررہا ہے، فضل الرحمن فوج کو امریکی فوج کی افغانستان میں حالت کو یاد کرارہا ہے، غدار وطن تین مرتبہ کا وزیراعظم دھوکہ دے کر بھاگنے والا انسان آرمی چیف اور ڈی جی آئی ایس آئی پر کسی طرح کے الزامات لگارہا ہے، ڈان لیکس، وہ بھول گیا، ہر آرمی چیف سے اپنی لڑائی وہ بھول گیا، جب راحیل شریف کے سامنے اس کی ٹانگیں کانپا کرتی تھی وہ بھول گیا، اب اس ہی کا ایک غنڈہ سابق سپیکر قومی اسمبلی اب آرمی چیف کی ٹانگیں کانپنے کی بات کررہا ہے، اس کو دیکھ لینا چاہیے اس کے حلقے کے عوام کس طرح اس کو ذلیل کررہے ہیں، میڈیا بھرا پڑا ہے اس کے خلاف بیانوں سے، بے غیرت ایاز صادق یہ بھول گیا ہے کہ یہ ملک صرف فوج کی وجہ سے قائم ہے، اس سے پہلے بلاول بھٹو یہ نعرہ لگا چکا ہے مودی کا جو یار ہے غدار ہے غدار ہے، اب ان مودی کے یاروں میں ایاز صادق جیسے لوگ بھی شامل ہو گئے ہیں اپنے آقا کو خوش کرنے کے لئے اس نے پاک فوج پر حملہ کیا، اس کو شائد پتہ نہیں کہ اس کا آقا ملک دشمن وزیراعظم کی کہانی ختم ہو گئی وہ اب ماضی کا حصہ بن چکا ہے، اس کی بیٹی نانی مریم ملک میں حکمرانی کا صرف خواب دیکھ سکتی ہے وہ سمجھتی ہے کہ ن لیگ دوبارہ برسراقتدار آجائے گی یہ اس کی بھول ہے، اگر پنجاب دو صوبوں میں بٹ جاتا ہے تو تخت لاہور کے دو ٹکڑے ہو جائینگے، ن لیگ دوبارہ کبھی بھی اب حکومت میں نہیں آسکتی ہے، نواز شریف نے فوج پر پریشر ڈالنے کے جو ٹیکٹ استعمال کررہا ہے وہ اس کے گلے پڑ جائینگے، ضیاء الحق کی گود میں پرورش پانے والا نواز شریف اب فوج کا ہی دشمن بن گیا ہے، اس کو یہ احساس نہیں فوج ہی اس ملک کی سلامتی کی ضامن ہے، بھارت ہر طرف سے پاکستان پر یلغار کررہا ہے، وہ پاکستان کو صفحہ ہستی سے مٹادینا چاہتا ہے، وہ صرف چائنا کی وجہ سے پھنس گیا ہے ورنہ اب تک وہ آزاد کشمیر اور گلگت بلتستان پر حملہ کر چکا ہوتا اور دونوں ملک ایک خوفناک ایٹمی جنگ کی طرف بڑھ چکے ہوتے لیکن پاک فوج نے اس کو روکا ہوا ہے اور پوری تیاری کیساتھ بھارت کا مقابلہ کررہی ہے، نواز شریف اپنی سیاسی زندگی کی آخری اننگ کھیل رہا ہے اور اس نے ایازصادق جیسے مہروں کو آگے بڑھایا ہوا ہے لیکن یہ اس کی بھول ہے عوام نے اور خاص طور پر اس حلقے کے لوگوں نے جس طرح اس کو ذلیل کیا ہے وہ اس کے لئے بہت شرمناک ہے اور شائد پاکستان کی تاریخ میں کسی ایک آدمی کیلئے ا تنا سخت عوامی ردعمل کبھی نہیں آیاہو گا، ایاز صادق اب اپنے حلقے میں بھی سکون سے اکیلے نہیں نکل سکتا لوگ اس کو پتھر ماریں گے اور شائد یہی اس کا مقدار ہونا چاہیے، اس کا بھی سیاسی کیریئر شاید ختم ہو گیا ہے۔
ن لیگ اور نواز شریف کو نوشتۂ دیوار پڑھ لینا چاہیے او ر سمجھ لینا چاہیے ن لیگ کا دور اب ختم ہو گیا نہ نواز شریف کبھی برسراقتدار آسکتا ہے اور نہ مریم ،فوج کی مخالفت کر کے کوئی بھی جماعت برسراقتدار نہیں آسکتی، فوج اس ملک کی سلامتی کی ضامن ہے اس ملک کے عوام فوج کیساتھ کھڑے ہیں، عوام جانتے ہیں اس ملک کو سیاستدانوں نے کس طرح لوٹا، آج کل جو مہنگائی ہے اس لوٹ مار کا نتیجہ ہے،عوام غریب سے غریب تر ہوتے جارہے ہیں حکمران امیر سے امیر تر ہوتے گئے، فوج صرف واحد ادارہ بچا تھا جو سیاستدانوں کے شر سے محفوظ تھا، اب فوج بھی سیاستدانوں اور خاص طور سے نواز شریف کی تنقید برداشت کررہی ہے، ن لیگ نواز شریف، مریم صفدر کا انجام بہت قریب ہے اس ملک کے عوام فوج دشمن جماعت کو مسترد کر دینگے۔