آسٹرین حکام نے ویانا حملوں پر اپنی انٹیلی جنس ناکامی تسلیم کرلی

310

ویانا: آسٹرین حکام نے ویانا حملوں پر اپنی انٹیلی جنس ناکامی تسلیم کرلی۔

برطانوی نشریاتی ادارے کے مطابق آسٹریا کے حکام نے ویانا میں دہشتگرد حملے میں 4 شہریوں کی ہلاکت کے واقعے کو اپنی انٹیلی جنس ناکامی تسلیم کرتے ہوئے شہر کے انسداد دہشتگردی چیف کو عہدے سے ہٹادیا۔

پولیس کا کہنا ہے کہ ویانا شہر کے محکمہ انسداد دہشتگردی کے سربراہ کو ان کی اپنی درخواست پر عہدے سے معطل کیا گیا ہے۔

میڈیا رپورٹس کے مطابق یہ بات پہلے ہی سامنے آچکی ہےکہ آسٹرین شہریوں کو جولائی میں ایک وارننگ جاری کی گئی تھی جس میں کہا گیا تھا کہ ایک مشتبہ شخص نے سلوواکیا سے اسلحہ اور گولہ بارودی خریدنے کی کوشش کی تھی۔

برطانوی میڈیا کا بتانا ہےکہ آسٹریا کے حکام نے اب اس بات کا اعتراف کیا ہےکہ مسلح شخص نے جرمنی کے ان دو افراد سے ملاقات کی تھی جن پر پہلے ہی نظر رکھی جارہی تھی۔

آسٹریا کے وزیر داخلہ کا ویانا حملوں پر کہنا تھا کہ یقینی طور پر یہ ہماری نظر میں ایک ناقابل برداشت غلطیاں ہیں۔