ماڈل مشک کلیم کا وزن بڑھ جانے کے خوف میں مبتلا رہنے کا اعتراف

209

معروف ماڈل مشک کلیم نے ذہنی صحت کے عالمی دن کے موقع پر مداحوں سے ماضی میں ذہنی مشکلات کا سامنا کرنے کا تجربہ شیئر کرتے ہوئے اعتراف کیا ہے کہ ماضی میں وہ مختلف ذہنی مسائل کا شکار رہ چکی ہیں۔

مشک کلیم نے انسٹاگرام پوسٹ پر ذہنی صحت کے عالمی دن کے موقع پر ہسپتال میں زیر علاج رہنے کی تصویر شیئر کرنے سمیت دیگر تصاویر شیئر کرتے ہوئے اعتراف کیا کہ وہ بھی ماضی میں ذہنی مسائل کا شکار رہ چکی ہیں۔

مشک کلیم نے بتایا کہ سال 2019 ان کے کیریئر کے لیے سب سے اہم سال تھا اور اسی سال ہی انہوں نے 25 ویں سالگرہ منائی تھی۔

ماڈل نے بتایا کہ 25 ویں سالگرہ کے موقع پر وہ ’ڈسمورفوبیا‘ کے باعث ہسپتال داخل ہوئی تھیں۔

ماڈل نے اعتراف کیا کہ جب وہ ’ڈسمورفوبیا‘ کے باعث ہسپتال میں داخل ہوئیں تو ان کی عمر 25 سال، قد 6 فٹ جب کہ وزن 48 کلو گرام تھا اور وہ اس خوف میں مبتلا تھیں کہ ان کا وزن حد سے زیادہ بڑھ چکا ہے۔

’ڈسمورفوبیا‘ دراصل ایک ایسی ذہنی کیفیت کا نام ہے، جس میں مبتلا ہونے والے شخص کو ہر وقت یہ خوف طاری رہتا ہے کہ وہ وزن بڑھ جانے کی وجہ سے بدصورت ہوجائے گا۔