آرمینیائی فوج نے دوسرے شہر پر بھی گولہ باری کردی، آذربائیجان

303

آذربائیجان نے کہا کہ آرمینیا کی افواج نے جنوبی قفقاز میں دوسرے شہر گانجا پر بھی گولہ باری کی ہے۔

آرمینیا نے مذکورہ الزام کی تردید کی ہے لیکن نیگورنو-کاراباخ میں آرمینیا کے مسلح گروہ کے رہنما نے دعویٰ کیا کہ ان کی افواج نے آذربائیجان کے شہر گانجا میں واقع ایک فوجی ہوائی اڈہ تباہ کردیا ہے۔

نیگورنو-کاراباخ کے رہنما ارائیک ہارٹیونیان نے کہا کہ ’اب سے آذربائیجان کے بڑے شہروں میں قائم مستقل فوجی یونٹوں کو نشانہ بنایا جائے گا‘۔

دوسری جانب آذری وزارت دفاع نے کہا کہ نیگورنو-کاراباخ سے متصل شہروں ’ٹیرٹر اور ہورادیز‘ پر شدید گولہ باری کی جارہی ہے جبکہ خطے کی فوج نے بتایا کہ اس کا دارالحکومت اسٹیپنکارت بمباری کی زد میں ہے۔

واضح رہے کہ لڑائی ایک ہفتہ قبل شروع ہوئی اور 1990 کی دہائی کے بعد سے اب تک کی بدترین سطح پر پہنچ گئی ہے۔

گزشتہ روز ایران نے آرمینیا اور آذربائیجان کے مابین نیگورنو-کاراباخ میں جاری جنگ کے نتیجے میں اپنے سرحدی دیہاتوں پر مارٹر فائر گرنے پر دونوں ممالک کی فوجوں کو خبردار کیا تھا۔

واضح رہے کہ آرمینیا اور آذربائیجان کے مابین جس متنازع علاقے پر جنگ جاری ہے اس کی سرحدیں ایران کے ساتھ بھی ملتی ہیں۔

دوسری طرف آرمینیا کی جانب سے جنگ بندی پر بات کرنے کا عندیہ دیا گیا ہے، متعلقہ حکام کا کہنا تھا کہ وہ روس، امریکا اور فرانس کے ساتھ نیگورنو-کاراباخ میں جنگ بندی سے متعلق مذاکرات کریں گے۔