اسرائیل سے معاہدے کا مقصد ایران کو نشانہ بنانا نہیں، اماراتی وزیر خارجہ

244

متحدہ عرب امارات کے وزیر مملکت برائے امور خارجہ انور گرگاش نے پیر کو کہا کہ اسرائیل کے ساتھ تعلقات معمول پر لانے کے لیے متحدہ عرب امارات کا معاہدہ ایک "خود مختار فیصلہ” تھا اور اس کا ایران سے کوئی لینا دینا نہیں۔

خبر رساں ایجنسی رائٹرز کے مطابق متحدہ عرب امارات نے کہا کہ اس نے ابوظہبی میں ایران کے ناظم الامور طلب کیا ہے اور ایرانی صدر حسن روحانی کی تقریر کے جواب میں انہیں "سخت الفاظ میں میمو” دیا ہے جہاں وزارت خارجہ نے روحانی کی تقریر کو ‘ناقابل قبول’ قرار دیا ہے۔

ہفتہ کے روز گفتگو کرتے ہوئے روحانی نے کہا کہ متحدہ عرب امارات نے اسرائیل کے ساتھ تعلقات کو معمول پر لانے کے معاہدے تک پہنچ کر ‘بہت بڑی غلطی’ کی ہے اور اس معاہدے کو خلیجی ریاستوں سے غداری قرار دیا۔