صرف 7 فیصد پاکستانیوں کے پاس لیپ ٹاپ اور 2 فیصد کے پاس ٹیبلٹ ہیں: رپورٹ

271

پاکستانی ریسرچ آرگنائزیشن گیلپ ڈیٹا اینالیٹکس نے حال ہی میں پاکستان میں لیپ ٹاپ اور ٹیبلٹ کے حوالے سے ایک تحقیق کی ہے۔

گیلپ کے پاکستان سوشل اینڈ لیونگ اسٹینڈرڈ میجرمنٹ سروے سے یہ بات سامنے آئی کہ صرف 7 فیصد پاکستانیوں کے پاس لیپ ٹاپ جب کہ 2 فیصد پاکستانیوں کے پاس ٹیبلٹس ہیں۔

گیلپ کی جانب سے کیے جانے والے اس حالیہ سروے کا بنیادی مقصد پاکستان میں وبائی مرض کورونا وائرس کے اثرات کا مطالعہ کرنا تھا کہ کیسے وبا نے اسمارٹ فونز اور دیگر ڈیوائسز کو عیش و عشرت کے بجائے اسے ضرورت بنا دیا اور ملک میں کتنے لوگوں کے پاس لیپ ٹاپ اور ٹیبلٹس موجود ہیں۔

یہ سروے پاکستان کے شماریات بیورو کے ذریعے ہر 2 سال میں ایک بار کیا جاتا ہے اور اس میں 24 ہزار سے زائدخاندان اور ایک لاکھ 15 ہزار سے زائد افراد شامل ہیں۔

لیپ ٹاپ رکھنے والے 7 فیصد پاکستانیوں کو اگر علاقائی بنیاد پر توڑا جائے تو اعدادو شمار کے مطابق بلوچستان میں 2 فیصد لوگوں کے پاس لیپ ٹاپ ہیں۔