قوم کو 75واں یوم آزادی مبارک، لاہور میں عمران خان کا شاندار جلسہ!!

107

14اگست یوم آزادی ،زندہ قومیں اپنا یوم آزادی پورے جوش جذبہ اور ولولے سے مناتی ہیں۔ آزادی ایسی نعمت ہے جس کو حاصل کرنے کیلئے دنیا کی ہر قوم نے قربانیاں دی ہیں۔ بادشاہت اب کسی چیز کاحل نہیں ہے۔ لوگ اپنے حقوق مانگتے ہیں غلامی نہیں اس وقت دنیا میں صرف چند ملکوں میں بادشاہت رہ گئی ہے۔ سعودی عرب میں اس وقت سب سے کامیاب بادشاہت سمجھی جاتی ہے باقی افریقہ میں چند ملک رہ گئے ہیں۔ آزادی کا مفہوم کوئی پاکستانی قوم سے پوچھے کس طرح ایک عظیم قیادت نے ہندوئوں اور انگریزوں سے پاکستان چھین لیا۔ قائداعظم جیسا لیڈر صدیوں میں پیدا ہوتا ہے اگر پاکستان کی تاریخ اٹھا کر دیکھیں تو کئی لاکھ لوگوں نے اپنا خون دیا۔ ہزاروں عورتوں کی عصمتیں لٹی ہیں۔ کتنی مائیں، بہنیں، بیٹیاں ابھی بھی سکھوں کے گھروں میں مل جائیں گی۔ کتنی عورتوں نے کنوئوں اور دریائوں میں کود کر جان دی۔ کتنی عورتوں کو ان ہی کے مردوں نے موت کی نیند سلا دیا۔ تاریخ میں شاید دنیا کے کسی ملک کو آزادی حاصل کرنے کیلئے اتنی قربانی اور خون نہیں دینا پڑا ہو گا۔ یہ پاکستان کا المیہ ہے کہ نئی نسل کو اس شاید پتہ نہ ہو۔ یہ ملک کتنی قربانیوں سے بنا ہے۔ دنیا کے نقشے پر دنیا کی سب سے بڑی مسلمان سلطنت صرف ایک شخص کا شاخسانہ تھا وہ تھا قائداعظم محمد علی جناح۔ عظیم ایماندار انسان ،عظیم لیڈر ،ایسے لیڈر تو قسمت والی قوموں کو ملتے ہیں۔ کسی لیڈر میں اتنی صلاحیت نہیں ہوتی کہ وہ دو دشمنوں کو شکست دے سکے۔ انگریز اور ہندو۔
پاکستان کیوں بنایا گیا تھا آج کے دور میں کسی سے پوچھیں تو وہ بھی عجیب کیفیت میں پڑ جائے گا۔ پاکستان کیوں بنایا گیا تھا۔ پاکستان اسلام کے نام پر بنایا گیا تھا۔ جہاں اسلامی نظام قائم ہو گا جہاں اقلیتوں کو بھی برابر کے حقوق ہوں گے۔ ’’پاکستان کا مطلب کیا لا الہ الااللہ‘‘ ۔ یہ پاکستان کا نظریہ تھا یہ پاکستان مسلمانوں کا ملک جہاں اپنے اپنے عقیدہ اور مذہب کے مطابق ہر پاکستانی اپنی زندگی گزار سکے لیکن پاکستان بننے کے بعد کیا ہوا۔ اقرباءپروری، لوٹ مار اور حکومتیں بدلنے لگیں۔ پاکستان پر 30سال سے زیادہ فوجیوں نے حکومت کی پھر دو شیطان ڈاکو اس ملک پر قابض ہو گئے۔ نواز شریف، زرداری ان دونوں نے ملک کو لوٹ کھایا عوام غریب ہوتے گئے یہ دونوں امیر ہوتے گئے ایک نے لندن میں فلیٹ بنائے ایک نے دبئی کو خرید لیا۔ سب کی اولادیں بھی کروڑ پتی ہو گئیں سب نے خوب لوٹا اور اپنے ساتھیوں کو بھی لوٹنا سکھایا۔ ان کے وزیروں نے بھی خوب مال بنایا سندھ اسمبلی سپیکر ضمانت پر، وزیر انفارمیشن ضمانت پر، سندھ کا وزیراعلیٰ مقدمے بھگتتا رہا ہے۔ پورا سندھ موہنجو داڑو بن گیا لیکن بلاول ہائوسس میں بھیسیں اور گائے پالی جاتی ہیں۔پنجاب میں ہائی وے گروی رکھ کر دی گئیں۔ ایئرپورٹ گروی رکھ دئیے گئے۔ ایک عجیب سا عالم ہے ہر طرف پریشانی ہی پریشانی۔ ہر طرف ہو کا عالم ہے۔ غریب عوام پریشان ہیں مہنگائی آسمان پر ہے کوئی پوچھنے والا نہیں۔ پٹرول مہنگا، بجلی مہنگی، گیس مہنگی، عام آدمی کیا کھائے اور کیا کرے۔
ان حالات میں عمران خان کی حکومت کو ختم کر دیا گیا۔ ایک ووٹ سے اس کو ہرا دیا گیا۔ تحریک عدم اعتماد کو کامیاب کرایا گیا۔ پی ڈی ایم نے سمجھا تھا کہ عمران ہار جائے گا وہ خاموش ہو جائے گا لیکن ایسا نہیں ہوا۔ عمران پوری قوت سے واپس آیا اس نے جلسے کرنے شروع کردئیے۔ عوام کو بیدار کیا عوام نے اس کی آواز پر لبیک کہا ۔ضمنی انتخابات میں پنجاب میں اس نے ن لیگ کا صفایا کر دیا۔ عوام نے پوری قوت سے اس کا ساتھ دیا نتیجے میں پنجاب گورنمنٹ بن گئی پرویز الٰہی نے حلف اٹھا لیا۔ پرویز الٰہی نے 14 اگست کے جلسے میں جو انہوں نے خطاب کیا اس میں انہوں نے بی اے تک مفت تعلیم کا اعلان کیا۔ زبردست اعلان چاروں صوبوں کو اس پر عمل کرنا چاہیے۔ عمران خان نے بھی تاریخی خطاب کیا اور قوم کو آئندہ کا لائحہ عمل دیااب وہ نو سیٹیوں سے الیکشن لڑنے جارہے ہیں امید ہے وہ ہر سیٹ سے کامیاب ہوں گے۔ عوام ان کا ساتھ دیں گے۔ انشاء اللہ وہ ان 9سیٹوں کو دوبارہ جیت کر یہ ثابت کریں گے کہ وہ ہی اس ملک کے حقیقی لیڈر ہیں۔