اردن کے بادشاہ کے سوتیلے بھائی شہزادہ حمزہ شاہی عہدے سے دستبرار

399

عمان: اردن کے شہزادہ حمزہ نے اپنے شاہی عہدے کو ترک کر دیا۔عالمی خبر رساں ادارے کے مطابق اردن کے بادشاہ شاہ عبداللہ دوم کے سوتیلے بھائی شہزادہ حمزہ نے اپنے خط میں حکومتی پالیسیوں کو کڑی تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے شاہی عہدہ چھوڑنے کا اعلان کیا ہے۔شہزادہ حمزہ نے خط میں مزید لکھا کہ میں نے حالیہ برسوں میں جو کچھ دیکھا اس کے بعد میں اس نتیجے پر پہنچا ہوں کہ میرے ذاتی عقائد جس کی تعلیم میرے والد نے دی اور جس پر میں نے زندگی بھر عمل کرنے کی کوشش کی، ملک کی موجودہ پالیسیوں سے متصادم ہیں اس لیے میں عہدہ چھوڑ رہا ہوں۔خیال رہے کہ بادشاہ شاہ عبداللہ دوم کے سوتیلے بھائی شہزادہ حمزہ نے ایک سال قبل اپنے بڑے بھائی کے خلاف بغاوت کی سازش کی تھی۔ اس سازش پر شہزادہ حمزہ کو گھر میں نظر بند کردیا گیا تھا اور سابق شاہی چیف ایڈوائزر اور شاہی خاندان کے ایک نابالغ رکن کو 15 سال قید کی سزا سنائی گئی۔نظر بند ہونے کے بعد شہزادہ حمزہ نےعوامی طور پر شاہ عبداللہ کے ساتھ اپنی وفاداری کا اعتراف کر ليا جس کے بعد ان کی نظر بندی ختم کر دی گئی تھی۔