نیلسن منڈیلا کے پوتے اور داماد کا تحریک آزادی کشمیر کی مکمل حمایت کا اعلان

217

کشمیریوں کی حمایت میں جنوبی افریقا کے رہنما بھی سامنے آ گئے، عظیم رہنما نیلسن منڈیلا کے پوتے مانڈلا منڈیلا اور داماد پرنس موذی دلامنی نے تحریک آزادی کشمیر کی مکمل حمایت کا اعلان کیا ہے اور بھارت سے بین الاقوامی قوانین کے احترام کا مطالبہ بھی کر دیا۔

پوتا نیلسن منڈیلا مانڈلا منڈیلا نے کہا کہ ہم جنوبی افریقا کی عوام اور رائل ہاؤس آف منڈیلا کی طرف سے کشمیریوں کے لیے امن اور نیک تمناؤں کا پیغام دیتے ہیں۔ ہم دنیا کے تمام آزادی پسند انسانوں کی طرف سے کشمیریوں کے ساتھ یکجہتی کا اظہار کرتے ہیں۔ ہم کشمیریوں کی انصاف اور حقِ خود ارادیت کی جدو جہد کے ساتھ کھڑے ہیں ۔ رائل ہاؤس آف منڈیلا کشمیریوں کی دہائیوں پر مبنی جدو جہد کو سپوٹ کرتا ہے۔

انہوں نے کہا کہ ہم ان کی جدو جہد کی حمایت جاری رکھیں گے جب تک کہ انہیں انصاف نہیں مل جاتا اور بین الاقوامی قوانین کے تحت حقِ خودارادیت حاصل نہیں کر لیتے ہم واضح طور پر بھارت کے اقدامات کی مذمت کرتے ہیں اور مطالبہ کرتے ہیں کہ بھارت بین الاقوامی قوانین کا احترام کرے ورنہ اسے انسانیت کے خلاف کئے گئے جرائم کے نتائج بھگتنا پڑیں گے۔

داماد نیلسن منڈیلا پرنس موذی دلامنی کا کہنا تھا کہ بین الاقوامی منظر نامے میں مقبوضہ کشمیر کے حالات پر ہمیشہ سے تشویش رہی ہے۔ اقوام متحدہ بھی مسئلہ کشمیر سے متعلق مدتوں پہلے اپنا فیصلہ سنا چکا ہے۔ آج جو کشمیر کا معاملہ زیر بحث ہے اس پر اقوام متحدہ اظہار رائے کرچکا ہے کہ کشمیر کی سرزمین پاکستان کی ہے ۔