ویمبلڈن میں کم عمر کھلاڑی شائقین کی توجہ کا مرکز

343

لندن: ویمبلڈن میں کوکو گوئف بیڈمنٹن میں نام بنانے والی واحد کم عمر کھلاڑی نہیں ہیں بلکہ ایما راڈوکانو نے ایونٹ میں اپنے کھیل سے شائقین کی توجہ حاصل کرلی ہے۔

بتایا گیا ہے کہ 18 سالہ راڈوکانو اور 17 سالہ کوکو گوئف نے ہفتے کے روز گریس کورٹ کے گرینڈ سلیِم میں ایک منٹ سے بھی کم فرق سے چوتھے راونڈ کے لیے کولیفائی کرلیا۔

کوکو گوئف دوسری بار ویمبلڈن کے دوسرے ہفتے میں پہنچی ہیں اس سے قبل 2019 میں انہوں نے زبردست پرفارمنس کا مظاہرہ کیا تھا اور وہ توجہ کا مرکز بن گئی تھیں۔

دوسری جانب ایما راڈوکانو، جو اپنا پہلا گرینڈ سلیِم ٹورنامنٹ کھیل رہی ہیں، توقعات کے برعکس برطانوی شائقین کی توجہ حاصل کرنے میں کامیاب ہوگئی ہیں۔

ایما راڈوکانو آل انگلینڈ کلب میں سورانا کرسٹیا کو 3-6 ، 5-7 سے ہراکر اوپن ایرا میں پہچنے والی سب سے کم عمر خاتون بن چکی ہیں۔