ووٹ کا حق اور بے شمار مسائل

256

سعودی عرب کویت وغیرہ کرونا کی چائنہ والی ویکسین نہیں مانتے اور یہاں پاکستان میں محکمہ ھیلتھ والوں نے ہزاروں پاکستانیوں کو چائنہ کی ویکسین لگا دی ہے،اب جب ھیلتھ والوں سے بات کی جاتی ہیتو وہ کہتے ہیں کہ یہ ڈیٹا نادرا والے ڈلیٹ کریں گے اور نادرا والے کہتے ہیں کہ یہ ھیلتھ والوں کا کام ہے اور ہزاروں پاکستانیوں کو فٹ بال کی طرح کبھی ادھر پھینک رہے ہیں اور کبھی ادھر پھینک رہے ہیں خدارا حکومت وقت کے نوٹس لیکہ جو اوورسیز دو ارب ڈالر ماہانہ بھیجتے ہیں اور پاکستان کی معیشت چلتی ہے ان کو حکومت وقت کا محکمہ ھیلتھ ذلیل و خوار کر رہا ہے۔اوورسیز پاکستانیوں کے بے شمار مسائل ہیں ان میں موبائل فون لانے بینک اکائونٹ کھلوانے ویکسین لگوانے سے لے کر نادرا سسٹم اور الیکشن کمیشن سے متعلق بے شمار مسائل کا انبار لگا ہوا ہے۔بدھ کے روز نیویارک سے آئے چئیرمین پاکستان اوورسیز فورم شاہد رضا رانجھاکا اوورسیز پاکستانیوں کے ووٹ کے حق کے لیے الیکشن کمیشن کے سامنے ایک بھر پور احتجاج کیا گیا۔یاد رہے کہ
پاکستان کی قومی اسمبلی نے اوورسیز پاکستانیوں کو ووٹ کا حق دینے کا بل منظور کر لیا ہے۔
قومی اسمبلی سے منظور ہونے والے بل کے متن کے مطابق الیکشن کمیشن بیرون ملک مقیم پاکستانیوں کو ووٹنگ کا حق دینے کے لیے نادرا یہ کسی دیگر ادارے کے ساتھ مل کر کام کرے گا۔
بل کے متن میں مزید کہا گیا ہے کہ الیکشن کمیشن عام انتخابات میں ووٹ ڈالنے کے لیے الیکٹرانک ووٹنگ مشین حاصل کرے گا۔ لیکن الیکشن کمیشن قباحتیں کھڑے کئے ہوئے ہے۔ 73 سال بعد، اوورسیز پاکستانیز کے right of vote کا بل پاکستان کی قومی اسمبلی نے منظور کرلیا۔ اپوزیشن نے ووٹنگ کا بائیکاٹ کیا اور بل کی مخالفت بھی کی۔ اب بلِ سینیٹ آف پاکستان میں پیش ہوگا۔ 23 جون2021 چئیرمین پاکستان اوورسیز فورم شاہد رضا رانجھا صاحب کے قیادت میں اوورسیز پاکستانیوں نے ECP کے سامنے اوورسیز کے ووٹ کے حق کے لیے پر امن احتجاج کیا.
چئیرمین پاکستان اوورسیز شاہد رضا رانجھا صاحب کی ہدایات پر ایڈووکیٹ ابوسفیان تارڑ لیگل ایڈوائزر نے اپنے مطالبات پر مبنی یادداشت الیکشن کمیشن آف پاکستان، چئیرمین سینیٹ، بلال بھٹو زرداری اور اپوزیشن لیڈر شہباز شریف کو پیش کی کہ وہ اوورسیز ووٹ بل کی مخالفت نہ کریں.
وزیراعظم پاکستان عمران خان صاحب نے فوری واقع کا نوٹس لیتے ہوئے پاکستان اوورسیز فورم کی قیادت کو فوری اپنے چیمبر طلب کر لیا جس پر چئیرمین پاکستان اوورسیز فورم شاہد رضا رانجھا صاحب کی قیادت میں اوورسیز پاکستانیوں کے وفد نے انکے چیمبر میں ملاقات کی.
وفد نے اوورسیز پاکستانیوں کے ووٹ کے حق کا بل قومی اسمبلی سے پاس کرنے پر وزیراعظم پاکستان کا شکریہ ادا کیا.
وزیراعظم پاکستان نے بل سینیٹ سے منظور کروانے کی یقین دھانی کروائی اوورسیز پاکستانیوں اور پاکستان اوورسیز فورم کے لیے نیک خواہشات کا اظہارِ کیا.
وزیراعظم پاکستان نے دوران ملاقات گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ اوورسیز پاکستانی اس ملک کا اصل سرمایہ ہیں میں چاہو گا اوورسیز اسمبلیوں میں آئیں اور قانون سازی کے عمل کا حصہ بنیں
اس ملک کی تقدیر صرف اوورسیز ہی بدل سکتے
وزیراعظم کا مزید کہنا تھا کہ میں اووسیز کے حقوق اور درپیش مسائل کے حوالے سے مزید قانون سازی کا خواہاں ہوں میں اور میری حکومت اس پر خصوصی دلچسپی لے رہی کہ اوورسیز پاکستانیوں کے حقوق کا تحفظ ہو.
یاد رہے اوورسیز پاکستانیوں نے ECp کے سامنے ایک نقاطی ایجنیڈے پر دھرنا دے رکھا تھا وزیر اعظم پاکستان نے فوری مزاکراراتی ٹیم بھیج کر سارے مطالبات تسلیم کر لیے جسکے بعد پرامن احتجاج اپنے اختتام کو پہنچا۔