افغانستان: یورپی فوجیوں کی اکثریت کا خاموشی سے انخلا

258

برلن: افغان جنگ میں حصہ لینے والے مشن میں شامل زیادہ تر غیر ملکی افواج نامکمل ہونے والی جنگ کے خاتمے کے ساتھ ملک کو خانہ جنگی کی نہج پر چھوڑ کرباضابطہ طور پر انخلا سے کئی ماہ قبل ہی خاموشی سے نکل چکی ہیں۔

جرمنی اور اٹلی نے بدھ کے روز اپنا مشن ختم کرنے کا اعلان کیا اور پولینڈ کا بھی آخری فوجی اپنے وطن واپس پہنچ گیا اور 20 سال قبل جب پہلا غیر ملکی فوجی وہاں تعینات کیا گیا تھا اس کے بعد سے اب تعیناتیوں کی تعداد کم ترین سطح پر آگئی۔

11 متعدد ممالک کی جانب سے کیے گئے اعلانات کا تجزیہ ظاہر کرتا ہے کہ ستمبر 2001 کو ہونے والے حملوں کے بعد جب نیٹو اتحادی القاعدہ سے ملک کو چھڑانے کے لیے امریکی حملے کی حمایت کی خاطر صف آرا ہوا تو طاقت اور اتحاد کے ایک ڈرامائی اور عوامی مظاہرے کے بالکل برعکس زیادہ تر یورپی فوجی ایک چھوٹی سی تقریب کے بعد وہاں سے نکل چکے ہیں۔