ابراہیم رئیسی ایران کے نئے صدر منتخب

222

تہران: ایران کے صدارتی الیکشن میں سخت گیر نظریات کے حامل اور اسٹیبلشمنٹ کے پسندیدہ امیدوار ابراہیم رئیسی 60 فیصد ووٹ حاصل کرکے صدر منتخب ہوگئے۔

ایران کے سرکاری ٹیلی وژن کے مطابق ابراہیم ریئسی نے 62 فیصد ووٹ لے کر صدارتی الیکشن میں فتح حاصل کرلی ہے۔ الیکشن میں 2 کروڑ 80 لاکھ افراد نے رائے شماری میں حصہ لیا جن میں سے ایک کروڑ 78 ہزار ووٹ ابراہیم رئیسی کو ملے۔

سرکاری سطح پر ابراہیم رئیسی کی فتح کے اعلان سے قبل ہی ایران کے سبکدوش ہونے والے صدر حسن روحانی نے کہا ہے کہ پُرامن الیکشن کے ذریعے نئے صدر کا انتخاب کرلیا گیا ہے میں کامیاب امیدوار کو مبارک باد پیش کرتا ہوں۔

حسن روحانی نے نئے صدر کا نام نہیں لیا تھا تاہم انہوں نے کہا کہ ہم جانتے ہیں کہ کس نے الیکشن میں درکار ووٹ حاصل کرلیے اور عوام نے کس کو آج منتخب کیا ہے۔

حسن روحانی کے برعکس دیگر دو سخت گیر امیدواروں محسن رضائی اور امیر حسین غازی زادہ ہاشمی نے ابراہیم رئیسی کو نام لیکر مبارکباد دی تھی۔

اسی طرح صدارتی الیکشن میں حصہ لینے والے اصلاح پسند امیدوار عبدالنصر حماتی نے بھی ٹوئٹر پر ابراہیم رئیسی کو نام لیکر کامیابی پر مبارکباد دی تھی۔ عبدلانصر حماتی مرکزی بینک کے سابق گورنر بھی تھے۔