سفارتکاروں کے ذریعے پاکستان مخالف پروپگنڈہ: بھارتی سازش بے نقاب

235

اسلام آباد: ڈیجیٹل فارنسک لیب (ڈی ایف آر لیب) نے بھارتی حکومت کی فرم کے ذریعے جعلی و گمراہ کن نیوز اور فیکٹ چیک ویب سائٹس چلانے کا پتا چلایا ہے۔

ان ویب سائٹس کے ذریعے پاکستان مخالف اور نریندر مودی حکومت کے حق میں پروپیگنڈہ کیا جاتا تھا اور اسے بھارتی سفارتکار اپنے سوشل میڈیا اکاؤنٹس کے ذریعے پھیلاتے تھے۔

ڈیجیٹل فارنسک لیب (ڈی ایف آر لیب) نے جمعرات کو اپنے ویری فائیڈ ٹوئٹر اکاونٹ پر تحقیقات کے نتائج شیئر کیے ہیں۔ ڈیجیٹل فارنسک لیب دنیا بھر میں جھوٹ اور غلط معلومات کا پھیلاؤ روکنے پر کام کرتی ہے۔

لیب کی تحقیقات کے مطابق بھارتی حکومت کی جانب سے کینیڈا میں قائم ایک فرم کی خدمات حاصل کی گئیں جس نے ایک نئی ویب سائٹ ’انڈیا ورسز ڈس انفارمیشن‘ کے ذریعے میڈیا ادارے کے بھیس میں نہ صرف بھارتی حکومت کے حق میں مواد کو پھیلایا بلکہ متعدد فیکٹ چیکس رپورٹس بھی شائع کیں۔

ان رپورٹس میں حکومت کے مخالفین اور اس پر تنقید کرنے والے ذرائع ابلاغ کے مقامی اور بین الاقوامی اداروں کو بھی نشانہ بنایا گیا۔

ان ویب سائٹس سے شائع کی جانے والی جعلی ’فیکٹ چیک‘ رپورٹس کو دنیا بھر میں موجود بھارتی سفارتکاروں نے اپنے تصدیق شدہ ٹوئٹر اور فیس بک اکاؤنٹس کے ذریعے آگے پھیلایا۔

یورپی یونین میں بھی گزشتہ سال فیک نیوز کے حوالے سے کام کرنے والے تحقیقی ادارے ’ای یو ڈس انفو لیب‘ نے دنیا بھر میں ڈس انفارمیشن پھیلانے والی سینکڑوں ویب سائٹس کا پتا لگایا تھا جو 15 سال سے خفیہ طور پر کام کر رہی تھیں۔