نیپالی کوہ پیما نے پچیسویں مرتبہ ماؤنٹ ایورسٹ کو سر کر کے اپنا ریکارڈ توڑ دیا

125

نیپال کے کوہ پیما کامی ریٹا شرپا نے پچیسویں مرتبہ دنیا کی بلند ترین چوٹی ماؤنٹ ایورسٹ کو سر کر کے اپنا ہی ریکارڈ توڑ دیا ہے جو سب سے زیادہ بار چوٹی سر کرنے کا تھا۔

مہم کی منتظم مینگما شرپا نے اے ایف پی کو بتایا کہ کامی ریٹا اپنی 25 ویں مہم کے ساتھ نیا ریکارڈ بنایا ہے۔

دو دہائیوں سے زائد تک گائیڈ رہنے والے شرپا نے آٹھ ہزار 848 (29 ہزار انتیس فٹ) کی چوٹی 1994 میں اس وقت سر کی جب وہ ایک کمرشل مہم کے لیے کام کرتے تھے۔ اس کے بعد سے انہوں نے تقریباً ہر سال ایورسٹ کو سر کیا۔

کامی ریٹا شرپا نے بیس کیمپ پر آگے بڑھنے سے قبل اے ایف پی کو بتایا کہ ’یہ بات صرف ریکارڈ سے متعلق نہیں تھی، میں دو ہزار بیس میں پچیسویں بار چڑھ کر پچاس سالہ عمر کی سلور جوبلی منانا چاہتا تھا مگر کورونا کی وجہ سے پچھلے سال یہ نہیں ہو سکا۔ اس لیے اس لیے میں نے اپنا یہ خواب پورا کیا۔

کامی ریٹا شرپا اس سے قبل دنیا کی کئی دیگر چوٹیاں بھی سر کر چکے ہیں جن میں مشکل ترین سمجھی جانے والی پاکستان کی آٹھ ہزار میٹر بلند چوٹی کے ٹو بھی شامل ہے۔

ان کا کہنا تھا کہ ’میں اپنی قوم کے لیے کوہ پیمائی کرتا ہوں، ہمارے جیسے گائیڈ نیپال کی ٹورازم کے شعبے کے لیے ضروری ہیں۔ ہمارے بغیر غیر ملکی نہیں آئیں گے۔

Leave A Reply

Your email address will not be published.