چین کے رئیلٹی شو میں ‘قید’ غیرملکی نوجوان آخرکار رہا

234

روس سے تعل رکھنے والا ایک نوجوان اخرکار چین کے رئیلٹی شو کی ‘قید’ سے رہا ہونے میں کامیاب ہوگیا جس کے لیے ہفتوں سے کوشش کررہا تھا۔

چائنیز بوائے بینڈ نامی اس رئیلٹی شو میں 27 سالہ ولاڈاسلو ایوانو حادثاتی طور پر شامل ہوگیا تھا اور حیران کن طور پر فائنل تک پہنچ گیا حالانکہ وہ لوگوں سے درخواست کرتا رہا تھا کہ اسے ووٹ دیکر اسے شو سے باہر کردیں۔

لگ بھگ 3 ماہ بعد آخرکار اس کی خواہش پوری ہوگئی اور اسے فائنل میں جاکر ناکامی کا سامنا کرنا پڑا۔

ولاڈاسلو چینی زبان بول سکتا ہے اور وہ اس شو کا حصہ بھی مترجم کے طور پر بنا تھا۔

تاہم ڈائریکٹر نے اس کی شخصیت کو دیکھنے کے بعد بطور امیدوار شو کا حصہ بننے کے لیے مدعو کرتے ہوئے کہا کہ کیا وہ نئی زندگی کو آزمانا پسند کرے گا۔

وہ تیار تو ہوگیا مگر اس کے فوری بعد ہی اسے اپنے فیصلے پر پچھتاوا ہونے لگا مگر کنٹریکٹ کے باعث شو سے الگ ہونا ممکن نہیں تھا۔

یہی وہ ہے کہ شو میں وہ بے دلی سے گانے، رقص اور دیگر کام کرتا نظر آتا۔