خون جمنے کے واقعات: ڈنمارک نے اسٹرا زینیکا ویکسین کے استعمال کو روک دیا

25

اہم یورپی ملک ڈنمارک نے برطانوی کورونا ویکسین ایسٹرا زینیکا کے استعمال کو عارضی طور پر روک دیا ہے۔

برطانوی نشریاتی ادارے بی بی سی کے مطابق ڈنمارک نے ایسٹرا زینیکا کورونا ویکسین کو متعدد لوگوں میں خون جمنے ( بلڈ کلاٹنگ) کے واقعات کے بعد اس کے استعمال پر مکمل پابندی عائد کردی۔

وصول کنندگان کے خون کے جمنے کے غیر معمولی واقعات کے بعد ڈنمارک آکسفورڈ اسٹرا زینیکا کوویڈ ویکسین کے استعمال کو روکنے والا پہلا یورپی ملک بن گیا ہے۔

ڈنمارک کی جانب سے اس اقدام کے بعد ملک میں کورونا ویکسین کے ٹیکے لگانے کا پروگرام  کئی ہفتوں تک غیر معمولی تاخیر کا شکار رہ سکتا ہے۔

ڈنمارک کے حکام کا کہنا ہے کہ اسٹر زینیکا ویکسین کے تمام 2.4 ملین خوراکوں کو اگلے نوٹس تک مارکیٹ سے واپس لیا جائے گا۔

ڈنمارک کے ہیلتھ اتھارٹی نے کہا ہے کہ دوران مطالعہ یہ بات مشاہدے میں آئی کہ اسٹرا زینیکا ویکسین لگانے والے لوگوں میں خون کے جمنے کے واقعات متوقع تعداد سے کہیں زیادہ  ہے اور اب تک 40،000 افراد اس سے متاثر ہوئے ہیں۔

Leave A Reply

Your email address will not be published.