مسافر طیارہ مار گرانے کا واقعہ: ایران میں 10 عہدیداروں پر فرد جرم عائد

291

ایران نے کہا ہے کہ گزشتہ برس یوکرائن کے مسافر طیارے کو مار گرانے کے الزام میں 10 عہدیداروں پر فرد جرم عائد کردی گئی ہے۔

ایران کے ایک فوجی پراسیکیوٹر نے مذکورہ پیش رفت سے آگاہ کیا۔

ایک تقریب کے دوران غلام عباس طورکی نے بتایا کہ ‘وہ بہت جلد عدالت میں حاضر کیے جائیں گے’، تاہم فوجی پراسیکیوٹر نے ملزمان کے نام بتانے سے گریز کیا۔

انہوں نے کہا کہ 10 افراد کو انضباطی کارروائی کا سامنا ہوگا جن میں انہیں ملازمت سے رخصت یا مدت ملازمت میں تخفیف بھی ہوسکتی ہے۔

غلام عباس طور نے کہا کہ جلد ہی ان پر مقدمہ چلایا جائے گا۔

منگل کے روز ایرانی مسلح افواج کی عدالتی تنظیم کے سربراہ شکر اللہ بہرامی نے اس بات کی تصدیق کی تھی کہ فوجی عدالت میں کیس نمٹا دیا گیا اور فرد جرم عائد کردی گئی۔

انہوں نے 21 مارچ سے شروع ہونے والے ایرانی سال نو کا حوالہ دیتے ہوئے کہا کہ انشااللہ نئے سال میں اس کیس پر عدالتی سماعت ہوگی۔