بی جے پی کے نظریات نیپال تک پھیلانے پر کٹھمنڈو کا بھارتی حکومت سے احتجاج

277

نیپال نے بھارتی وزیر داخلہ کی طرف سے بی جے پی کی نظریات ملک تک پھیلانے پر سخت اعتراض کرتے ہوئے احتجاج کیا ہے۔

نیپال کے وزیر خارجہ پردیپ گیاوالی نے کہا کہ بھارت سے باضابطہ احتجاج کیا ہے۔ حکومت نے میڈیا کی خبروں کا نوٹس لیا ہے اور اس بارے میں نیپال نے اپنے اعتراضات باضابطہ طور پر بھارتی حکومت تک پہنچا دیے ہیں۔

غیر ملکی میڈیا کے مطابق بھارت میں نیپالی سفیر نیلم بار آچاریہ نے اس بارے میں بھارتی حکومت کو نیپال کی ناراضگی سے بھی آگاہ کیا ہے۔ بھارتی میڈیا میں بھی یہ خبریں شائع ہوئی ہیں کہ نئی دہلی میں نیپالی سفیر نے بھارتی وزارت خارجہ کے حکام سے فون پر بات کی ہے۔

یاد رہے کہ اتوار کو ریاست تری پورہ کے وزیر اعلی بپلب دیو نے اگرتلہ میں پارٹی کے کارکنان سے خطاب کرتے ہوئے کہا تھا کہ بی جے پی کو پڑوسی ملک نیپال اور سری لنکا میں بھی وسعت دینے کے منصوبے پر کام ہورہا ہے۔ جب امیت شاہ پارٹی کے صدر تھے اس وقت انہوں نے اپنے اس منصوبے کو ان کے ساتھ شیئر کیا تھا۔

بپلب دیب کا کہنا تھا کہ ’ہم اگرتلہ میں ریاستی گیسٹ ہاؤس میں بات چيت کر رہے تھے اسی دوران پارٹی کے ریاستی رہنما اجے جموال نے کہا کہ بیشتر ریاستوں میں تو بی جے پی ہی کی حکومت ہے۔ امیت شاہ نے کہا تھا ابھی نیپال اور سری لنکا باقی ہیں۔ ہمیں نیپال اور سری لنکا میں بھی پارٹی کو وسعت دینے کی ضرورت ہے ۔ ہمیں وہاں بھی جیت حاصل کرنی ہے۔