چین سے مقابلے کیلیے امریکا بھارت کومضبوط بنانا چاہتاہے:مشیر قومی سلامتی

342

اسلام آباد: امریکی مشیرقومی سلامتی کے دفتر سے سامنے آنے والی ایک دستاویز میں انکشاف کیا گیا ہے کہ امریکا جنوبی بحرالکاہل کے خطے میں چین کا مقابلہ کرنے کیلئے بھارت کودفاعی اور معاشی طورپرمضبوط بنانے کی کوششیں کررہا ہے جس کے پاکستان کی سلامتی پر بھی دور رس اثرات مرتب ہونگے۔

جنوبی بحرالکاہل فریم ورک کے حوالے سے 10 صفحات پر مشتمل اس دستاویز میں اس بات کا احاطہ کیا گیا ہے کہ کس طرح 2030ء تک چین کو دنیا کی نمبر 1 معیشت بننے سے  روکنا ہے۔اس منصوبے کی منظوری فروری  2018ء میں ٹرمپ انتظامیہ نے دی تھی،اب دیکھنا ہے کہ  بائیڈن انتظامیہ اسے جاری رکھ سکتی ہے  یا نہیں۔

دستاویز سے پتہ چلتا ہے کہ خطے میں بھارت کو لیڈ رول دینے کیلئے امریکا اپنے اتحادی ممالک کو بھی ساتھ ملانے کی کوششیں کریگا۔خطے میں امریکی مفادات کے تحفظ امریکا بھارت کو خطے میں اپنا سب سے بڑا دفاعی شراکت دار بنائے گا۔اسے نیوکلیئرسپلائیرزگروپ کی رکنیت دلانے کی بھی کوشش کی جائیگی۔بھارت کی فوجی،انٹیلی جنس اور سفارتی سطح پر ہرطرح کی حمایت کی جائیگی۔چین کے بیلٹ اینڈ روڈ انشیوٹو منصوبے  کے حوالے سے چین کی طرف سے شروع کی گئی انفرمیشن مہم اور بیانیہ کوغلط ثابت کرنے کیلئے پورا زور لگایا جائیگا۔