خوشبوؤں کی شاعرہ کو بچھڑے 26 برس بیت گئے

335

خوشبو کی شاعرہ پروین شاکر کو اپنے چاہنے والوں سے بچھڑے 26 برس بیت گئے لیکن آج بھی ان کے محبت بھرے اشعار لوگوں کے دل میں گھر کرتے ہیں۔

شاعرہ پروین شاکر 24 نومبر 1952 کو کراچی میں پیدا ہوئیں اور انہوں نے اردو ادب میں چاشنی گھولتے ہوئے اشعار میں محبت کی خوشبو بکھیری۔

الفاظ کا انتخاب اور لہجے کی شگفتگی نے پروین شاکر کو مقبول شاعرہ بنایا، یہی وجہ ہے کہ دنیا آج بھی ان کی غزلوں اور اشعار کی دیوانی ہے۔

پروین شاکر نے اپنی پہلی نظم کی جِلد ’خوشبو‘ 1976 میں شائع کی تھی جس کے بعد ’خوشبو‘ کی اور بھی جِلدیں شائع کی گئیں اس کے علاوہ ایک اور تصنیف ماہ تمام کا سحر آج بھی مداحوں پر طاری ہے۔

خوشبوؤں کی شاعرہ 42 سال کی عمر میں 26 دسمبر 1994 کو اسلام آباد میں ٹریفک حادثے کا شکار ہوکر دنیائے فانی سے کوچ کر گئیں لیکن ان کی شاعری آج بھی مداحوں کے دلوں میں زندہ ہے۔