کیا آپ سمارٹ فون سے تنگ ہیں؟

408

سمارٹ فون ہمارے رشتوں کو گھن کی طرح چاٹ رہا ہے، معاشرتی بگاڑ کا باعث بھی ہے اس کے جہاں لاتعداد فائدے ہیں وہیں نقصانات بھی کھل کر سامنے آ رہے ہیں۔

لاتعداد وجوہات کی بنا پر سمارٹ فون ہماری زندگی کا   جزو لاینفک‘‘ بن چکا ہے۔ ہم اس سے اور یہ ہم سے بچ نہیں سکتے۔ ہم دونوں کا زندگی بھر کا بلکہ چولی دامن کا ساتھ ہے۔ ہمیں یوں لگنے لگا ہے کہ زندگی جہاں ہم رہتے ہیں، وہاں نہیں ہے بلکہ اس کی سکرین میں پوشیدہ ہے۔ سمارٹ فون کے اردگرد گھوم رہی ہے۔ اتنی سی زندگی ہی ہمارا ماحول ہے۔

اس کی مدد سے کسی کو ہراساں بھی کیا جا سکتا ہے اور بلیک میل بھی بلکہ اس کی بعض ایپس قتل اور دہشت گردی میں معاون بن رہی ہیں، نفرتیں پھیلا رہی ہیں۔

ایک رپورٹ کے مطابق کوئی فون یا ایس ایم ایس نہ آنے کے باوجود بھی لوگ دن بھر میں درجنوں مرتبہ اس کی سکرین کو دیکھتے ہیں، یہ سوچ کر کہیں کوئی پیغام صرف نظر تو نہیں ہو گیا۔ یوں ہم سمارٹ فون کو بہت زیادہ وقت دینے لگے ہیں، بلکہ اب تو ہماری عملی زندگی بھی متاثر ہونے لگی ہے۔ بہت سے لوگوں کا کہنا ہے کہ وہ اسے کم وقت دینا چاہتے ہیں لیکن خود پر بھی انہیں قابو نہیں رہا کیا کریں؟ چنانچہ کبھی کبھی جان چھڑانے کو جی چاہتا ہے لیکن کسی بیماری کی مانند ہم سے چپک چکا ہے۔ہر دم اسے ہاتھ میں تھامنے سے سکون ملتا ہے۔